June 2007


( Written at the time when two countries came very close to 5th war . Dedicated to Pakistani men with and without uniform who always respond to the call .They say ” A man who does not love his land can not love a woman ):)

ھمنوا آج نہیں
آج مجھے جانا ہے
میں نے مانا ہے تیری جان سے پیاری ہستی
تیری آنکھوں میں اسی پیار کا اقرار بھی ہے
تیرے بالوں میں حسیں رات کا سنُاٹا یے
تیرے گالوں پہ نئی صبح کا اظہار بھی ہے

پر میرا اور بھی وعدہ ہے کسی سے ھمدم
میری مٹُی جو مجھے سب سے حسیں پیاری یے
میرے اسلاف نے ہے اس کو لہو سے سینچا
میرے پرجوش جوانوں نے بھی جاں ہاری ہے

پھر اٹھا ہے وہی دشمن مع سامانِ حرب
مری زمین نے بیٹوں کو پھر پکارا ہے
اپنی مٹُی سے ہی گر جو وفادار نہیں
تجھ سے میری یہ چاہت بھی پھر ادھوری ہے
یہ بھی ممکن ہے کھو جاؤں کہیں رستے میں
اپنے اس پیار کی تکمیل پر ضروری ہے

میں نے اب تک تو صرف تیرا کہا مانا ہے
مگر
میری جاں آج نہیں!
آج مجھے جانا ہے

کھو نہ جانا ” سے “

– fromKho na JanaCopyrights Reserved

افق کے پار جانا ہے
حسیں ان وادیوں میں جا کے
سب کچھ بھول جانا ہے
افق کے پار جانا ہے

سنا ہے آج بھی چڑیاں وہاں پر چہچہاتی ہیں
ندی بھی بن کسی آواز کے یوں بہتی جاتی ہے
انہی چپ سی فضاؤں میں
ذرا سا گنگنانا ہے
افق کے پار جانا ہے

سنا ہے آج بھی پریاں وہاں پر پائی جاتی ہیں
کسی بھی اجنبی کو دیکھ کر وہ کھو سی جاتی ہیں
انہی پریوں کی شہزادی کو سوتے سے جگانا ہے
افق کے پار جانا ہے

وہاں جا کر ہمیں اپنی نئی دنیا بسانی ہے
وہ لمحوں کی مکمل داستاں خود کو سنانی ہے
نہ تجھ کو یاد کرنا ہے نہ تجھ کو یاد آنا ہے
مگر تنہائی میںخود کو
ہنستے میں رلانا یے
افق کے پار جانا ہے۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔

کھو نہ جانا ” سے “

– fromKho na JanaCopyrights Reserved

Il était un grand nombre de fois
Un homme qui aimait une femme
Il était un grand nombre de fois
Une femme qui aimait un homme
Il était un grand nombre de fois
Une femme et un homme
Qui n’aimaient pas celui et celle qui les aimaient.

Il était une fois
Une seule fois peut être
Une femme et un homme qui s’aimaient

– Robert Desnos

Translation
Many times upon a time
There was a man who loved a woman.
Many times upon a time
There was a woman who loved a man.
Many times upon a time
There was a man and there was a woman
Who did not love the ones who loved them.

Once upon a time
Perhaps only once
A man and a woman who loved each other

بہتر ہے دل کے ساتھ رہے پاسبانِ عقل
لیکن کبھی کبھی اسے تنہا بھی چھوڑ دے
جینا وہ کیاجو ہو نفسِ غیر پر مدار
شہرت کی زندگی کا بھروسہ بھی چھوڑ دے

ہے عاشقی میں رسم الگ سب سے بیٹھنا
بت خانہ بھی حرم بھی کلیسا بھی چھوڑ دے
سوداگری نہیں، یہ عبادت خدا کی ہے
اے بے خبر، جزا کی تمنا بھی چھوڑ دے

علامہ محمد اقبال

 

– Allama Mohammad Iqbal

یہ نہ تھی ہماری قسمت کہ وصالِ یار ہوتا
اگر اور جیتے رہتے یہی انتظار ہوتا

تیرے وعدے پر جئے ہم تو یہ جان جھوٹ جانا
کہ خوشی سے مر نہ جاتے اگر اعتبار ہوتا

تیری نازکی سے جانا کہ بندھا تھا عہد بودا
کبھی تو نہ توڑ سکتا اگر استوار ہوتا

یہ کہاں کی دوستی ہے کہ بنے ہیں دوست ناصح
کوئی چارہ ساز ہوتا ، کوئی غمگسار ہوتا

غم اگرچہ جاں گسئل ہے پہ کہاں بچیں کہ دل ہے
غمِ عشق گر نہ ہوتا غمِ روزگار ہوتا

کہوں کس سے میں کہ کیا ہے، شبِ غم بُری بلا ہے
مجھے کیا برا تھا مرنا اگر ایک بار ہوتا

ہوئے مر کے ہم جو رسوا، ہوئے کیوں نہ غرقِ دریا
نہ کبھی جنازہ اٹھتا نہ کہیں مزار ہوتا

یہ مسائلِ تصوف یہ تیرا بیان غالب
تجھے ہم ولی سمجھتے جو نہ بادہ خوار ہوتا

 

مرزا اسد اللہ خان غالب

 

– Mirza Ghalib

( Someone was taking about Ghalib today and it reminded me of this popular work from the genius )

“We shall never cease to explore. But the end of all our explorations will be to return to where we started and know the place for the first time”

– T.S.Eliott

“…ask not what your country can do for you — ask what can you do for your country.”

– J.F.Kennedy

(One of the most favourite quote of recent times. Although June 3rd is important to Pakistan but I like the quote as it is applicable to any country )