February 2009


کل کو دوش کیا دیں ہم
کل تو اک فسانہ ہے
کل کو کیوں پکاریں ہم
کل کو کس نے جانا ہے
آج ہی حقیقت ہے
اپنی کار گزاری کی
آج ہم نے کھونا ہے
آج ہی تو پانا ہے

یہ دنیا خوبصورت ہے“ سے “

Translation

Why should we blame yesterday
it is no more than a story now
Why should we call tomorrow
who has seen tomorrow
Today is the reality
of our actions
Its today we can lose
Its today we can win

From ” Yeh Dunya Khubsoorat Hai “

Advertisements

……

سب تیری ہی تصویر کے رنگ ہیں۔۔۔۔۔۔
تو میرے سنگ ہے
بادلوں کی طرح
ساحلوں کی طرح
خوشبو میں بسے
گلستاں کی طرح
چاندنی رات کے
آسماں کی طرح
مجھ میں بسی
تو ہے جاں کی طرح
ہر موڑ تیری ادایّیں میری
میری ہر سانس میری وفایّیں تیری

Translation

…………..
All are colors of your reflection….
As you are with me
Like the clouds
Like the shores
Like the garden
drenched in fragrance
Like the sky
in the moonlit night
You live in me
like the soul
On every turn your every act is mine
In every breath , my faithfulness is yours

Rose

گنگناتی فضاّ
گیت گاتی ندی
لہلہاتی ہوا
دل لبھاتی پون
مسکراتی کرن
سب تیری ہی تصویر کے رنگ ہیں۔۔۔۔۔۔

Translation

The humming environment
The singing river
The gleeful air
The heartening current
The smiling ray
All are colors of your reflection….

Shikwa… ( 2 Parts )

Jawab -e-Shikwa ( 3 Parts )

بہت آزاد پنچھی ہے
کسی بھی پل اُڑ آتی ہے
غموں کو یہ سموتی ہے
خوشی میں چین لاتی ہے
کبھی کانٹوں کے جیون میں
کبھی ذلفوں کی چھاؤں میں
کبھی پتھر کے شہروں میں
کبھی پیپل کے گاؤں میں
سکوں پر صرف ملتا ہے
اسے ممتا کے پاؤں میں

یہ دنیا خوبصورت ہے“ سے “

Translation

As a free bird
it comes to you any instant
absorbs the sadness
brings peace in happy moments
It comes
in life full of hurdles
in the shadows of tresses
in the city of stones
in the village of peepal
but only finds peace
at the feet of a mother

From ” Yeh Dunya Khubsoorat Hai “

تجھے دیکھا، تجھے چاہا، تجھے پوجا میں نے
زندگی میں تو صرف ایک تمنّا کی ہے

کھو نہ جانا“ سے “

Translation

I saw you, fell in love, worshiped you
I had a single wish in my life

from ” Kho na JanaCopyrights Reserved